قومی سلامتی مشیروں کے مجوزہ مذاکرات بھارت کی عائد کی گئی پیشگی شرائط کی بنیاد پر نہیں ہو سکتے ،پاکستان

بھارتی وزیر خارجہ نے یکطرفہ طور پر مذاکرات کے ایجنڈے کو دو آئٹمز تک محدود کر دیا، ایسے مذاکرات بے مقصد ہونگے ، پاکستان اور بھارت کے درمیان مذاکرات کا بڑا مقصد کشیدگیوں کو کم کرنا اور حالات معمول پر لانے کے پہلے قدم کے طور پر اعتماد بحال کرنا ہوتا ہے، قومی سلامتی مشیروں کے مذاکرات کا واحد مقصد دہشتگردی پر بات کرنا ہے تو امن کے امکانات کے فروغ کی بجائے اس سے الزام تراشی میں اضافہ،اور ماحول مزید کشیدہ ہو گا،دفتر خارجہ کا بھارتی وزیر سشما سوراج کی پریس کانفرنس کے بعد باضابطہ بیان جاری