آرمی چیف کی مدت ملازمت میں توسیع کا معاملہ غیر ضروری طور پر اچھالا گیا ، جنرل راحیل شریف نے واضح کیا کہ وہ ملازمت میں توسیع کی کوئی سوچ نہیں رکھتے، آرمی چیف کی مدaت ملازمت میں توسیع کیلئے کوئی فائل وزیر اعظم ہاؤس نہیں بھیجی گئی اور نہ ہی یہ معاملہ حکومت میں کسی سطح پر زیر غور تھا، جنرل راحیل شریف نے فوج کو مثبت ادارہ بنادیا، تاریخی طور پر پاک بھارت تعلقات بداعتمادی کا شکار رہے ،ابھی تک فضا100 فیصد ٹھیک نہیں ہوئی ، ہماری سرزمین پر دہشت گردی کے تانے بانے بھارت سے ملتے رہے ،بھارتی وزیر دفاع سے ذاتی طور پر کوئی رابطہ نہیں

وزیر دفاع خواجہ آصف کانجی ٹی وی چینل کو انٹرویو