480 ارب روپے کے گردشی قرضے آئی پی پیز کو خلاف ضابطہ دیئے گئے‘ پیسے اے جی پی آر کے توسط سے جاتے ہیں مگر وزارت خزانہ نے ہنگامی طور پر ایک دن میں فیصلہ کرکے رقم کی ادائیگی کی جس میں اے جی پی آر کو بائی پاس کیا گیا

قومی اسمبلی کی پبلک اکاؤنٹس کمیٹی میں آڈیٹر جنرل آف پاکستان رانا اسد امین کا انکشاف