جماعت اسلامی پی آئی اے کی نجکاری کے ایشو پر لاشوں کی سیات نہیں کرنا چاہتی، وزیراعظم افہام و تفہیم سے معاملہ حل کرنے کیلئے فوری اقدامات اٹھائیں، تمام سیاسی جماعتوں پر مشتمل پارلیمانی کمیٹی بنا کر معاملہ اس میں حل کیا جائے ، جن لوگوں نے ارب روپے کا نقصان پہنچایا ان کے خلاف کارروائی کی جائے، مارچ میں کرپشن کے خاتمے کیلئے تحریک چلائیں گے،نجکاری کوئی حادثاتی کام نہیں ،ن)لیگ کی حکومت کا معاشی فلسفہ بن چکا ہے، قومی ایئر لائن ملک کی سفیر ہے کوئی عام ادارہ نہیں جسے خسارے کے نام پر فروخت کیلئے پیش کر دیا جائے، نجکاری مرض کا علاج نہیں، مریض سے جان چھڑانا ہے صرف پاکستان کی قومی ایئر لائن ہی نہیں بھارت، امارات سمیت دیگر متعدد ممالک کی ایئر لائنز بھی خسارے میں ہیں، یہ ممالک تو انہیں فروخت کرنے کا نہیں کہہ رہے

امیر جماعت اسلامی سراج الحق کا پریس کانفرنس سے خطاب