مناسب انتظامات کرنے کی صلاحیت نہ رکھنے والی سیکیورٹی کمپنیوں کے لائسنس منسوخ کردینگے ،سیکیورٹی کمپنیاں اپنے ملازمین کو جدید ہتھیار اور ان کی مناسب تربیت کا انتظام کر یں ، ای سی ایل میں پسند نا پسند کی بنیاد پر کوئی نام شامل نہ کیا جائے ، آئین اور قانون کے مطابق ملزمان کے نام ای سی ایل میں شامل کرنے کو یقینی بنایا جائے گا،یورپی یونین سے تمام تصفیہ طلب امور کے حل سے ڈی پورٹیز کی منظم انداز میں واپسی ممکن ، انسانی سمگلنگ کی روک تھام میں مدد ملے گی، پرسوں کے اہم اجلاس میں میڈیا ہاؤسز اور تعلیمی اداروں کی سیکیورٹی کیلئے تمام سٹیک ہولڈرز کی مشاورت سے سیکیورٹی پلان کو حتمی شکل دی جائے گی

وفاقی وزیر داخلہ چوہدری نثار علی خان کا اعلیٰ سطحی اجلاس سے خطاب