قومی اسمبلی کی قائمہ کمیٹی نے وزارت بین الصوبائی رابطہ کے مالی سال 2016-17کیلئے ناروال سپورٹس کمپلیکس ،اسلام آباد میں ہونیاولی نیشنل گیمز سمیت متعدد منصوبوں کیلئے3ارب16کروڑ سے زائد کے بجٹ کی منظوری دیدی

، آڈیٹر جنرل کو31مارچ تک پی ایچ ایف کا آڈٹ کرکے رپورٹ پیش کر نے کہ ہدایت , پی ایچ ایف کو2008سے2015تک ایک ارب روپے سے زائد کے فنڈز دیئے گئے ، آج تک ان کا آڈٹ نہ ہوسکا فیڈریشن کے سابق عہدیداروں نے ہاکی کا بیڑہ غرق کردیا، اس میں موجود گندکو صاف کرنے کی ضرورت ہے، ہاکی میں نئے ٹیلنٹ کی تلاش کیلئے بنائی گئی اکیڈمیوں نے پیسے کھائے مگر کھلاڑی پیدا نہیں کئے ،وزیراعظم کی بنائی گئی کمیٹی نے من پسند لوگوں میں عہدے بانٹے ،ہاکی فیڈریشن کو2008-15تک دئے گئے فنڈز کا آڈٹ ہوناچاہئے , پی ایچ ایف کی سلیکشن کمیٹی کے سابق چیئرمین میر ظفراﷲ جمالی کااجلاس میں اظہار خیال