علاقائی زبانوں کی ترویج اور ترقی کیلئے خاطر خواہ اقدامات کئے جائیں گے، وزیراعظم نے اردو کو بطور سرکاری زبان رائج کرنے کے حوالہ سے تمام وزارتوں اور ڈویژنوں کو ہدایت نامہ جاری کیا ہے، مادری اور علاقائی زبانوں میں ادب تخلیق کرنے والے گوشہ نشین بڑا مثبت اور ٹھوس کام کر رہے ہیں، مادری زبانوں کی نشوونما کیلئے سازگار ماحول نہ ملنے کی وجہ سے بعض علاقائی زبانیں آغوش مادر سے لے کر آغوش قبر تک ختم ہو جاتی ہیں، اردو زبان کو برگد کا درخت نہیں بنانا چاہتے تاکہ اس کے نیچے کوئی دوسری زبان پھل پھول نہ سکے

وزیراعظم کے مشیر برائے قومی تاریخ و ادبی ورثہ عرفان صدیقی کی مادری زبانوں کے عالمی دن کے موقع پر اکادمی ادبیات پاکستان میں منعقدہ مباحثہ میں گفتگو