مسلم لیگ (ن) داخلی جمہوریت کے لحاظ سے کمزور ترین سیاسی جماعت قرار دیدی گئی جبکہ جماعت اسلامی سب سے زیادہ جمہوری قرار دی گئی ہے۔ تحریک انصاف تیسرے ، عوامی نیشنل پارٹی چوتھے ،پیپلزپارٹی پانچویں، جے یو آئی (ف) اور ایم کیو ایم چھٹے نمبر پر رہیں۔ سیاسی جماعتوں کی داخلی جمہوریت کا مجموعی معیار 43فیصد سے کم ہو کر 2015میں 40فیصد رہ گیا، زیادہ تر جماعتیں اپنے قائدین کی مرہون منت ہیں ، جماعتوں کی فیصلہ سازی والی تنظیمیں عمومی طور پر کمزور اور غیر موثر ہیں۔پلڈاٹ نے ملک کی بڑی سیاسی جماعتوں کی داخلی جمہوریت پر سالانہ رپورٹ جاری کر دی