مودی کے دورہ کے بعد سے نوازشر یف کی جنرل راحیل شر یف سے کوئی ’’بات ‘‘نہیں ہوئی‘ ملاقات کیلئے وزیر اعظم نے کابینہ سمیت کسی کو اعتماد میں نہیں لیا ‘سیاستدانوں کی اکثر یت ’’چور ‘‘ہے ‘اس لیے وہ احتساب کیخلاف متحد ہیں ‘افواج پاکستان کو بھی احتساب کر نے سے روکا جا رہا ہے ‘حکمرانوں کی نااہلی سے پاک چین اقتصادی راہداری منصوبے کے معاملے پر پنجاب کو ’’گالیاں ‘‘پڑ رہی ہے ‘ایم کیوایم اور پیپلزپارٹی آج بھی ایک اور ’’اندر ‘‘سے (ن) لیگ پیپلزپارٹی کے ساتھ ہے ‘ 2016سے نوازشر یف حکومت سے نجات حاصل نہ کی گئی تو ملک سے کرپشن کے خاتمے کا خواب پورا نہیں ہوگا

عوامی مسلم لیگ کے سربراہ رکن قومی اسمبلی شیخ رشید احمد کا انٹرویو