بھارت کی پوری فوج بھی کشمیر آجائے تو وہ دہشتگردوں اور عسکریت پسندوں کا مقابلہ نہیں کرسکتی،مسئلے کا صرف واحد حل مذاکرات ہیں،عوام سے عوام کا رابطہ ضروری ہے،آزاد کشمیر پاکستان اور جموں وکشمیر بھارت کے پاس رہنا چاہیے ،میں نے ایسا بیان دے کرکوئی نئی بات نہیں کی ،مقبوضہ کشمیر کے سابق کٹھ پتلی وزیراعلی فاروق عبداللہ