وفاقی دارلحکومت،پنجاب اور خیبر پختونخوا میں موسلادھار بارشوں کا سلسلہ مسلسل تیسرے روز بھی جاری رہا، مکانات کی چھتیں گرنے سمیت مختلف حادثات میں درجنوں افراد جاں بحق ،100کے قریب زخمی،سینکڑوں مکان متاثر ،این ڈی ایم اے نے31 ہلاکتوں کی تصدیق کردی،شدید بارشوں سے ندی نالوں میں طغیانی ، نشیبی علاقے زیر آب آگئے،کئی علاقوں میں لینڈ سلائیڈنگ سے شاہراہیں بند،ملکہ کوہسار کے پہاڑوں پر برف باری کی پیش گوئی ، سیاحوں کا رش لگ گیا، ڈیموں میں پانی کی سطح انتہائی بلند ہوگئی،راول ڈیم کے سپل وے کھول دیئے گئے،جڑواں شہروں کے نشیبی علاقے بھی زیرآب آگئے،بے نظیر بھٹو انٹر نیشنل ایئرپورٹ پر فلائٹ آپریشن بری طرح متاثر