سٹیبلشمنٹ کی سوچ نہ بدلی تو پھر کوئی نیشنل ایکشن پلان کام نہیں آئے گا،سچ بولنے والوں کو غدار کہاجارہاہے، پارلیمنٹ میں بھی سچ نہیں بولاجا رہا توپھر ہماری زبانوں پر بھی پٹیاں باندھ دی جائیں ،حب الوطنی کے دعویداروں کو بخوبی جانتے ہیں ، محموداچکزئی نے پارلیمنٹ میں کھری کھری سنائیں، ان پر مقدمہ بنا توبار کی قیادت اوروکیل کادفاع کرینگے

سپریم کورٹ بار ایسوسی ایشن کی سابق صد عاصمہ جہانگیر سانحہ کوئٹہ کے شہداء کی فاتحہ خوانی کے بعد میڈیا سے بات چیت