وزیراعظم سے حکومت اور طالبان کمیٹیوں کی مشترکہ ملاقات،دہشت گردی کے واقعات پر وضاحت طلب کرنے کیلئے وفدوزیرستان بھیجنے کا فیصلہ، مذاکراتی عمل کو آگے بڑھانے کی تجاویز،دہشت گردی کے واقعات کی روک تھام، ان واقعات کے ذمہ داروں کی نشاندہی او رمستقبل کے لائحہ عمل پر تفصیلی تبادلہ خیال ،پاکستان دہشتگردی کی بھاری قیمت اداکرچکااب اسے ختم کرکے ہی دم لیں گے، وزیراعظم نواز شریف، عوام کو امن اور خوشحالی فراہم کرنا حکومت کا آئینی‘ دینی اور قومی فریضہ ہے،بطور وزیراعظم ان کی یہ ذمہ داری ہے کہ ملک میں امن و امان قائم کیا جائے اور خون خرابے کے شروع ہونے والے سلسلے کو فوری طور پر بند کیا جائے۔وزیراعظم کا ناشتے کی میز پر خطاب