امن مذاکرات۔۔۔۔۔؟ دہشت گردی جاری، کوئٹہ اور پشاور ایک ہی روز دھماکوں کی گونج سے لرز اٹھے ،19 افراد جاں بحق،70 سے زائد زخمی، کوئٹہ پرنس روڈ پر ایف سی کی گاڑی دھماکے کی زد میں آ گئی ،10 افراد جاں بحق،35 زخمی ہوگئے،پشاور کے تل بازار میں بکتر بند گاڑی پر خود کش حملہ،9 افراد زندگی کی بازی ہار گئے،صدر،وزیر اعظم ،وزیر داخلہ،عمران خان ،خورشید شاہ ،گورنر پختونخواہ سمیت دیگر سیاسی قائدین کی دھماکوں کی مذمت ، تحریک طالبان کا کوئٹہ، پشاور دھماکوں سے اظہار لاتعلقی ، احرار الہند نامی شدت پسند تنظیم نے کوئٹہ اور پشاور دھماکوں کی ذمہ داری قبول کرلی