کسی بھی فرد یا گروہ کو ریاست کے مساوی ٹھہرانا دانشمندی نہیں ہے،مولانا فضل الرحمان ،مذاکراتی عمل میں ریاست کی بجائے قومی قیادت نے ماضی میں قبائلی جرگہ کو جو اختیار دیا تھا وہ اس مسئلہ کی نوعیت اور حجم کے عین مطابق تھا،اگرچہ ملک کی قومی قیادت آل پارٹیز کانفرنس میں قبائلی جرگہ کو دئیے گئے اختیار سے ہٹ گئی ہے تاہم جمعیت علمائے اسلام قبائلی جرگہ کے ساتھ کھڑی اپنی وفاداری کی روایات اپنا رہی ہے، میڈیا سے گفتگو