ینگون میں ایک بار پھر نسلی فسادات ،مسلمانوں اور املاک پر حملے ،30سال بعد ہونیوالی مردم شماری سے حکومت نے مسلمانوں کو نکال باہر کردیا،عالمی برادری سے نوٹس لینے کا مطالبہ